غیر مسلم برادری کی سانحہ ماڈل ٹاؤن پر اظہار تعزیت

17 جون کو سانحہ ماڈل ٹاؤن میں پولیس کی طرف سے ہونے والی ریاستی دہشت گردی پر غیر مسلم برادری کے نمائندوں نے پرزور الفاظ میں مذمت کی اور اسے حکومتی بوکھلاہٹ اور بربریت قرار دیا۔ مسیحی رہنماوں کا ایک وفد جن میں مسیحی راہنماء فادر فرانسس ندیم، فادر عنائت برناڈ، فادر مائیکل، ڈاکٹر کنول فیروز، یوئیل بھٹی، پاسٹر سلیم، ریورنڈ فادر پاسکل پولوس، ریورنڈ راکی، ریورنڈ عمانویل کھوکھر، قیصر جوزف، جبکہ ہندو راہنماء پنڈت بھگت لال اور سکھ برادری کے نمائندہ سردار رمیش سنگھ (ایم پی اے) کے علاوہ پیر شفاعت رسول اور شبنم ناگی بھی شامل تھے، نے منہاج القرآن انٹرفیتھ ریلیشنز کے ڈائریکٹر سہیل احمد رضا سے ملاقات کی اور اس سانحہ میں جانی ومالی نقصان پر غم کا اظہار کیا۔

غیر مسلم برادری کے نمائندوں کا کہنا تھا کہ اس دھشت گردی اور غیر انسانی تشدد کی ذمہ دار وفاقی و پنجاب حکومت ہے، لہٰذا وہ مستعفی ہو۔ انہوں نے شہداء کے اہلِ خانہ اور ڈاکٹر طاہرالقادری کے ساتھ اظہار تعزیت کیا اور شہداء کے ورثاء سے مکمل یکجہتی کا اعلان کرتے ہوئے آئندہ کے لائحہ عمل میں بھر پور تعاون کی یقین دہانی کروائی۔ ڈائریکٹر انٹرفیتھ ریلیشنز سہیل احمد رضا نے ان کا شکریہ ادا کیا۔


Your Comments

منہاج القرآن
منہاج ویلفئیر
منہاج اوورسیز
منہاج سسٹرز
اسلامک لائبریری
خطابات
ماہنامہ منہاج القرآن
ماہنامہ دختران اسلام
کاپی رائٹ © 1989 - 2018 پاکستان عوامی تحریک. جملہ حقوق محفوظ ہیں.